Play Copy
ﮨﮩﮪﮫﮬﮭﮮﮯﮰﮱﯓﯔﯕﯖﯗﯘﯙﯚﯛﯜﯝﯞﯟﯠﯡﯢﯣﯤﯥ

5. پھر جب حرمت والے مہینے گزر جائیں تو تم (حسبِ اِعلان جن) مشرکوں (نے اَز سر نو جنگ شروع کر دی ہے، دورانِ جنگ ان) کو جہاں کہیں بھی پاؤ قتل کر دو اور اُنہیں گرفتار کر لو اور انہیں قید کر دو اور (انہیں پکڑنے اور گھیرنے کے لیے) ہر گھات کی جگہ ان کی تاک میں بیٹھو، پس اگر وہ توبہ کر لیں اور نماز قائم کریں اور زکوٰۃ ادا کرنے لگیں تو ان کا راستہ چھوڑ دو (کیونکہ اِس صورت میں بھی معاہدۂ اَمن کی طرح جنگ کا جواز ختم ہوجائے گا)۔ بے شک اللہ بڑا بخشنے والا نہایت مہربان ہےo

5. So when the sacred months have passed, then (as declared) kill the idolaters (who have re-initiated war against you) wherever you find them (during the war), capture them, imprison them and lie in wait for them at every place of ambush (to catch and besiege them). So, if they repent, establish Prayer and start paying Zakat (the Alms-due), then leave their way open (because, like peace treaty, this too will remove excuses for war). Surely, Allah is Most Forgiving, Ever-Merciful.

(at-Tawbah, 9 : 5)