اس سورہ مبارکہ کا نام القصص ہے۔ یہ بھی مکی زندگی کے درمیانی عہد میں نازل ہونے والی سورتوں میں سے ایک سورہ ہے۔ اس کے مضامین میں استعماری طاقتوں کا بطلان، اسلام کے نظام معاشیات، اسلام کے نظام قانون، اسلام کے نظام اخلاق کی تفصیلات شامل ہیں۔

Play Copy

وَ قِیۡلَ ادۡعُوۡا شُرَکَآءَکُمۡ فَدَعَوۡہُمۡ فَلَمۡ یَسۡتَجِیۡبُوۡا لَہُمۡ وَ رَاَوُا الۡعَذَابَ ۚ لَوۡ اَنَّہُمۡ کَانُوۡا یَہۡتَدُوۡنَ ﴿۶۴﴾

64. اور (ان سے) کہا جائے گا: تم اپنے (خود ساختہ) شریکوں کو بلاؤ، سو وہ انہیں پکاریں گے پس وہ (شریک) انہیں کوئی جواب نہ دیں گے اور وہ لوگ عذاب کو دیکھ لیں گے، کاش! وہ (دنیا میں) راہِ ہدایت پا چکے ہوتےo

64. And it will be said (to them): ‘Call your (self-made) partners.’ So they will call them but they (the partners) will not respond to them and those people will see the torment. Would that they had taken guidance (in the world)!

(الْقَصَص، 28 : 64)